مینگورہ میں تیزاب گردی کا پہلا واقعہ

سوات : سوات کے مرکزی شہر مینگورہ میں تیزاب گردی کا پہلا واقعہ، نامعلوم افراد نے مردان کے رہائشی مزدور پر تیزاب پھینک کر شدید زخمی کر دیا
مینگورہ پولیس کے مطابق گلشن چوک کے قریب محلہ ملکانان میں نامعلوم افراد نے مردان کے رہائشی بختیار علی پر تیزاب پھینکا گیا ہے۔جس سے وہ شدید متاثر ہوا ہے۔جن کو فوری طبی امداد کے لئے پہلے سیدو شریف اور بعد میں ان کو تشویشناک حالت میں پشاور منتقل کر دیا گیا ہے۔ہسپتال زرائع کے مطابق ان کے بدن کا کافی حصہ جھلس گیا ہے۔ مینگورہ پولیس کے مطابق بختیار علی نے محلہ ملکانان میں ایک گودام کرائے پر لی تھی جس میں وہ سبزی سٹور کر رہا تھا جو صبح ریڑھی میں لاد کر بازار میں بھیجتا تھا پولیس نے بتایا کہ جس گودام میں وہ سبزی سٹور کر رہا تھا اسی گودام میں وہ خود رہ بھی رہا تھا تاہم نامعلوم ملزمان نے ان کے گودام میں ان پر تیزاب پھینک کر فرار ہوئے ہیں۔ مینگورہ پولیس نے نامعلوم ملزمان کے خلاف دفعہ 336 بی کے تحت مقدمہ درج کرکے مزید تفتیش شروع کر دی ہے۔ یاد رہے کہ سوات کے مرکزی شہر میں تیزاب گردی کا یہ پہلا واقعہ ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں