چین نے ایٹمی فیوژن ڈیوائس بنالیا

چین نے ایٹمی فیوژن ڈیوائس بنایا ، جو اگلی نسل کا یہ آلہ ہے جسے مصنوعی سورج کہتے ہیں اور یہ سورج سے 6 گنا زیادہ گرم ہے۔

چینی سائنس دان سورج کی توانائی کی کٹائی پر کام کر رہے ہیں ، لیکن یہ شمسی توانائی نہیں ہے۔ اس ملک نے اپنا ایک بہت ہی مصنوعی سورج تیار کیا ہے ، جوہری فیوژن ریسرچ ڈیوائس ہے جو سمجھا جاتا ہے کہ یہ صاف سورج کیطرح 
راہیں ہموار کرے گا۔

سنہوا نیوز کی خبر کے مطابق ، ری ایکٹر کی تکمیل کا اعلان منگل کو کیا گیا تھا ، اور امید کی جا رہی ہے کہ 2020 میں اس کا آغاز ہوجائے گا


ہم امید کرتے ہیں کہ آپ کو یہ پوسٹ پسند آئے گی اور کمنٹ باکس میں ضرور آپ اپنی قیمتی رائے دیں گے۔

Post a Comment

جدید تر اس سے پرانی